یہاں سے پاکستان کو دیکھتا ہوں تو ۔۔۔۔۔۔۔

1
1426

یہاں سے پاکستان کو دیکھتا ہوں تو لگتا ہے کہ ہر گھر میں ماتم ہے، جہاں مذہب اور عقیدے کے فرق پر لوگ ایک دوسرے کا گلا کاٹ دیتے ہیں۔۔۔شہر کے چوراستوں پر ڈاکووں کا راج ہے، ابھی کوئی ٹریفک کے اشارے پر آہستگی سے دروزہ کھول کر آپ کے برابر کی سیٹ پر بیٹھ جائے گا اور پستول کی نوک پر آپ کی گھڑی اور موبائل لے کر چلتا بنے گا۔۔۔۔پولیس کی گاڑی پر بھی اعتبار کیونکر کیا جاسکتا ہے۔۔۔سنا ہے وردی میں ڈاکو چھپے ہوتے ہیں۔۔۔یہاں سے پاکستان کو دیکھتا ہوں تو دل خون کے آنسو روتا ہے۔۔۔وہ جو پرسوں کوئٹہ میں بے گناہ مارے گئے ، کیا وہ کسی کھیت میں اگے تھے۔۔۔کیا ان کو کسی ماں نے نہیں جنا تھا۔۔۔یا وہ کسی بہن کے بھائی نہ تھے ۔۔اور وہ جو آنکھوں کے ایک ڈاکٹر کو اس کے معصوم بچے سمیت قتل کردیا گیا ۔۔۔کیا وہ انسان نہ تھا۔۔۔۔اس کو اس مقام تک پہنچنے کے لئے کی گئی ریاضت ایک لمحے میں اجاڑ دی گئ۔۔۔۔۔
یہاں سے پاکستان کو دیکھتا ہوں تو ایک تکلیف دل میں اٹھتی ہے جو میرے لفظوں کے بیان سے باہر ہے۔۔۔۔کل سے سوچتا ہوں کہ کیا لکھوں۔۔۔یہ لوگ جن کو احساس تک نہیں کہ انسان کی قیمت کیا ہے۔۔۔کیا ایک ضد کی زد میں لا کر کسی کا بھی سر کاٹا جا سکتا ہے، وہ جو ہمارے معیار کی کسوٹی پر پورا نہ اترتا ہواس کی گردن پر شکنجہ کس دیا جاتا ہے۔۔۔۔۔کیا لشکروں کے سالار انسانیت بھول گئے ہیں۔۔۔وہ جو رسم تھی کہ ہر بچے ، بوڑھے اور عورت کو امان دی جاتی تھی۔۔۔۔وہ گھروں میں رک رہنے والے تھے ان کو پناہ دی جاتی تھی۔۔۔۔۔دعوت کا اصول کیونکر فراموش ہو گیا۔۔۔۔۔
یہاں سے دیکھتا ہوں تو لگتا ہے کہ سب بکاو مال ہیں، بس قیمت کا فرق ہے۔۔۔۔جن روپوں کے لئے وہ اپنا ایمان بیچ رہے ہیں اس سے وہ کیا حاصل کریں گے۔۔۔۔۔۔کیا اصول ، کیا مذہب، کیا عقیدہ ہر چیز بازار میں بکتی ہے۔۔۔۔۔۔۔جس کے پاس دھن ہے وہ خریدتا ہے۔۔۔اور مارا کون جاتا ہے جو قاتل نہیں بن سکتا۔۔۔۔جو مجبور ہے۔۔۔جس کے دل میں ابھی ایمان ہے جو اپنے فائدے کے لئے کسی کا خون نہیں بہاتا۔۔۔۔
یہاں سے پاکستان کو دیکھتا ہوں تو اس فرق سے دل کٹتا ہے جو مزدور اور مالک میں ہے۔۔۔۔
میرے اللہ تو ہی پاکستان پر رحم فرما۔۔۔۔ہم تو آپس میں لڑ چکے۔۔۔۔ایک دوسرے کے خون کے پیاسے ہوئے ۔۔۔۔ان  آتش فشانوں پر اپنی رحمت برسا کر ان کو ٹھنڈا کردے۔۔۔۔

1 تبصرہ

  1. Han magar aesa bhee ha
    Magar aesa nahi bhee ha
    Ye wo Pakistan nahi ha jo sir aap wahan se daikh rahay hain
    Ye to wo Jahalat ha jis ka sodda Kar lea ha Auwamum Mubeen (Saree Auwam) nay Aduwam Mubeen (Khula Dushman: Shaitan) say
    Hum nay pasand kea Tan e Asani ko
    Hum nay psand kea Rock ko (bombastic music or life) aor Chora Salam ko
    Hum nay pasand kea Taj Mahal ko aor chora Ashhab-e-Suffa ko
    Aor ab ham majboor hain, Oxford kay, Apni Ala Taleem k leay, Higher Education k leay
    Kunkay hamari OXFORD nahi ha
    Hamary aptitude ko jana parta ha Germany main, Dooor say……..
    Jahan say usko ko Pakistan Wahan say nazar ata ha????
    Magar ye PAKISTAN bura Nahi Yaha pr Wo bura ha jo ham na khareeda ha Khuda ra dobara Pakistan ko mat daikho us burai ko daikho jo yaha k rahnay walo main ha, aor in kee apni khareed ke hui ha
    PAKISTAN pahalay heIn logon kee jaga khud badnam ho raha ha
    Bulkay ye to AZEEM TAR ha jo 18 karor awan k jurm apnay naam lagay huay ha

    Faqt Apka Student
    Tauseef
    From Pakistan

تبصرہ کریں

برائے مہربانی اپنا تبصرہ داخل کریں
اپنا نام داخل کریں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.